تازہ ترین
اوورسیز پاکستانیوں کی قانونی معاونت کیلئے ادارہ بنانے کا فیصلہاظہر علی ٹیسٹ اور بابر ٹی ٹوئنٹی کپتان مقرر۔ سرفراز فارغمولانا فضل الرحمان کا دھرنے کا اعلان۔ کنٹینرز بھی بنوالئےالیکشن کمیشن ارکان کے مستقبل کا فیصلہ ہونے کے قریبزلزلے سے اموات کی تعداد 38 ہوگئی۔ سینکڑوں افراد بے یارو مددگاربائیو میٹرک تصدیق کے باوجود بینک اکاؤنٹس آپریشنل نہ ہونیکی شکایاتملکی تاریخ میں پہلی بار مرغی 400 روپے کی ہوگئیگستاخ ٹیچر نوتن لعل کو قرار واقعی سزا دینے کا مطالبہنارتھ کراچی صنعتی ایریا میں ڈاکوؤں کا راجپنجاب حکومت نے ایڈز کنٹرول پروگرام کے فنڈز روک لئےافغانستان میں این ڈی ایس کمپاؤنڈ کے قریب دھماکہ۔ 30 ہلاکافغان طالبان کے حملے تیز۔ غنی حکومت کیلئے الیکشن درد سر بن گیاپولیسٹر فلامنٹ یارن پر دوبارہ ریگولیٹری ڈیوٹی عائد کئے جانے کا امکانسیاسی قیدیوں کو ڈیل پر مجبور کرنے کیلئے بلیک میلنگ شروعوفاق میں ساری ٹیم مشرف کی ہے۔ رضا ربانیپی ٹی آئی حکومت کے خاتمے کیلئے نواز شریف کا بڑا فیصلہسنسرشپ کا سامنا کرنے والے ممالک میں پاکستان کا 39واں نمبردورہ پاکستان کیلئے سری لنکا کی بے بی ٹیم کا اعلانبھارت کشمیر سے کرفیو کیوں نہیں اٹھا رہا؟ پاکستانی حکومت غافلجنوبی افریقہ: ہر 3 گھنٹے میں ایک عورت قتل کردی جاتی ہے

وکٹ ٹیکر سری لنکن اسپنر کا بالنگ ایکشن رپورٹ

وکٹ ٹیکر سری لنکن اسپنر کا بالنگ ایکشن رپورٹ
  • واضح رہے
  • اگست 20, 2019
  • 3:17 شام

گال ٹیسٹ کے دوران نیوزی لینڈ کے کپتان کین ولیم سن نے بھی کچھ اوورز کرائے تھے، جس پر ایمپائرز کو ان کا بالنگ ایکشن بھی مشکوک لگا

سری لنکا کو گال ٹیسٹ جتوانے میں اہم کردار ادا کرنے والے لیگ اسپنر اکیلا دننجایا پر مشکوک ایکشن کے باعث معطلی کے خطرات منڈلانے لگے ہیں۔ یہ 10 ماہ میں دوسری بار ہے کہ اکیلا دننجایا کا بالنگ ایکشن رپورٹ ہوا ہے، جس کے باعث وہ پابندی بھی بھگت چکے ہیں۔ گال ٹیسٹ میں ہی نیوزی لینڈ کے کپتان کین ولیم سن جو کہ ایک پارٹ ٹائم بالر ہیں، کا بالنگ ایکشن بھی رپورٹ ہوا ہے۔
کرکٹ ویب سائٹ کے مطابق اکیلا دننجایا کو ایک بار پھر بائیو مکینکس ٹیسٹ کے عمل سے گزارا جائے گا اور اگر اس بار بھی تجزیے میں ان کے بازو کا خم 15 ڈگری سے زائد رہا تو ان کے بین الاقوامی اور ڈومیسٹک کرکٹ میں بالنگ کرانے پر پابندی ہوگی۔

واضح رہے کہ گزشتہ برس بھی انہیں مشکوک ایکشن کے باعث معطل کر دیا گیا تھا، جس کے بعد دننجایا نے اپنے بالنگ ایکشن کو درست کیا اور آسٹریلیا کے شہر برسبین میں قائم بائیو مکینکس لیب سے ایکشن کلیئرنس کا سرٹیفکیٹ حاصل کیا تھا، جس کے بعد سے وہ مسلسل سری لنکن ٹیم کا حصہ رہے۔ تاہم اب ایک بار پھر انہیں ٹیم میں جگہ بنانے کی فکر پڑ گئی ہے۔

رپورٹ کے مطابق گال ٹیسٹ میں کین ولیم سن نے بھی تین اوورز کرائے، جو ان کے گلے پڑ گئے ہیں۔ اس سے قبل 2014 میں بھی کین ولیم سن کا بالنگ ایکشن مشکوک ہونے کی وجہ سے رپورٹ ہوا تھا۔